New Fatima Blog

This blog is about khwab ki tabeer, Turkish dramas Dubbed in Urdu, Poetry, Naat and cooking videos.

Wednesday, October 30, 2019

khwab mein bird dekhna



خواب میں پرندہ دیکھنا
bird,khwab mein parinda dekhna


 khwab mein bird dekhana, khwab mein parinda dekhna

Sunday, October 27, 2019

Nara e la Tahaf koshan bajnay day ishaq ki dhun (Ali zaryoun)


ali zaryoun poetry



نعرہ ء لا تخف کو سُن ،بجنے دے عشق کی یہ دُھن 


جلنے دے حاسدوں کے دل، تازہ غزل سنا کے چل 


تجھ پہ عطائے یار ہے ، نامِ علی بہار ہے !



بچھڑے ہوؤں کو پاس لا ! روٹھے ہوئے منا کے چل 

Friday, October 25, 2019

Main Jawaban Bhi Jinhain Gaali Nahi Deta Wo Log ( Ali Zaryoun Poetry)


ali zaryoun poetry


میں جواباً بھی جنہیں گالی نہیں دیتا وہ لوگ

میری جانب سے اِسے خاص محبت سمجھیں 

میں کسی بیچ کے رستے سے نہیں پہنچا یہاں 

حاسدوں سے یہ گزارش ہے ریاضت سمجھیں
Main Jawaban Bhi Jinhain Gaali Nahi Deta Wo Log ..! 

Meri Janib Say Isay Khas Mahabbat Samjhain .. !

Main Kisi Beech Kay Raste Say Nahi Pohncha Yahan !

Haasidon Say Yeh Guzarish Hay Riazat Samjhain .. !!



Thursday, October 24, 2019

Kabhi Kisi payam ko Wo “ seen” kar kay chor day (Ali zaryoun)


ali zaryoun poetry


Kabhi Kisi payam ko Wo “ seen” kar kay chor day 

Kisi Falak mizaaj ko zameen kar k chor day. 

Diye ki Mouj Hay Ali, Diye ko Ikhtayar hay 

Magar usay khabar kahan yeh Dukh Hay Mout Say Bara! 

Koi Kisi kay Piar par Yaqeen Kar k Chor Day 

!! کبھی کسی پیام کو وہ “سین” کر کے چھوڑ دے 

کسی فلک مزاج کو زمین کر کے چھوڑ دے 

دئیے کی موج ہے علی! دئیے کو اختیار ہے 

مگر اُسے خبر کہاں 

یہ دُکھ ہے موت سے بڑا 

کوئی کسی کے پیار پر یقین کر کے چھوڑ دے 











Jo bachi hai guzar doon acha (AMMAR IQBAL)

AMMAR IQBAL POETRY


جو بچی ہے گزار دوں ؟ اچھا!
زندگی تجھ پہ وار دوں ؟ اچھا!

اور تو کچھ نہیں ہے میرے پاس
خواب ہیں،مستعار دوں؟ اچھا!

آزما لوں تجھے وفا پیکر
تجھ کو راہِ فرار دوں؟ اچھا!

صبر کو تقویت ملے گی کیا؟
جبر کو اختیار دوں ؟ اچھا!

تم سنو اور ان سنی کر دو
میں صدا بار بار دوں؟ اچھا!

عمار اقبال

Sunday, October 20, 2019

lal o gohar kahan hein dafeenoon say pooch lo

REHMAN FARIS POETRY


لال و گوہر کہان ہیں دفینون سے پوچھ لو
سینوں میں کافی راز ہیں سینوں سے پوچھ لو
جھیلا ہے میں نے تِین سو پانستھ دکھوں کا سال
چاہو تو پیچلے با را محینون سے پوچھ لو
قبروں کے دکھ سے کم نہیں ہے کچے گھروں کا دکھ
تم زندہ لاشوں یینی مکینون سے پوچھ لو
چوتھا گواہ اندھا ہے حد کس طرح لگے
انیی گواہ تِین ہیں تینوں سے پوچھ لو
اور میں جون ہی بوائے بیج شجر پھوتنے لگے
مجھ پر یقین نہیں تو زمینوں سے پوچھ لو
چھن جائے گھر تو کیسے رلاتی ہے بے گھری
ٹوٹی انگھوتحیون کے نگھینون سے پوچھ لو
سمجھو گے دِل کا رمز مجھ سے ہے ابھی
تم شوق پُورا کر لو زحینون سے پوچھ لو
نیچے اترتے وقعت اسے موچ آگئی
آگے کا سارا واقعہ زینون سے پوچھ لو
ایک آدھ تو کرے گی ہے اقرار لازماً
دو تِین چار حسینوں سے پوچھ لو
پوچھو نا سجدہ گاہ سے سجدون کی چاشنی
ہاں پوچھنا ہے تو جبینوں سے پوچھ لو
جو بات اہل عرش بھی بتلا نہیں سکے
فارس وہ بات حق نشینوں سے پوچھ لو

Friday, October 4, 2019

Barelviyon Ka Kon Konsa Aqeedah Shirk Wala Hai? Maulana Makki Al Hijazi