New Fatima Blog

This website is about khwab ki tabeer by ibn e siren, Ibn e kathir, khwab nama e yousafi in urdu , Quran, Hadith, Dramas in Urdu and english, Poetry, Naat, and cooking.

a ads

Wednesday, September 23, 2020

Qissa Abhi Hijab Se Aage Nahin Barha

 


قصہ ابھی حجاب سے آگے نہیں بڑھا 
میں آپ ، وہ جناب سے آگے نہیں بڑھا 
مدت ہوئی کتاب محبت شروع کیے 
لیکن میں پہلے باب سے آگے نہیں بڑھا 
لمبی مسافتیں ہیں مگر اِس سوار کا 
پاؤں ابھی رکاب سے آگے نہیں بڑھا 
لوگوں نے سنگ خشت کے قلعے بنا لیے 
اپنا محل تو خواب سے آگے نہیں بڑھا 
طول کلام کے لیے میں نے کیے سوال 
وہ مختصر جواب سے آگے نہیں بڑھا 
                رخسارکا پتہ نہیں ، آنکھیں تو خوب ہیں 
دیدار ابھی نقاب سے آگے نہیں بڑھا 
وہ لذت گناہ سے محروم رہ گیا 
جو خواہش ثواب سے آگے نہیں بڑھا

Qissa Abhi Hijab Se Aage Nahin Barha

Qissa Abhi Hijab Se Aage Nahin Barha,

Main Aap, Wo Janab Se Aage NahinBarha

Muddat Hui Kitab-e-Mohabat Shuroo Kiye,

Lekin Main Pehle Baab Se Aage Nahin 

Barha..

Lambhi Musaftain Hain Magar Is Sawaar Ka,

Paaon Abhi Rakaab Se Aage Nahin Barha..

Logon Ne Sang-o-Khasht K Qiley Bna 

Liye,

Apna Mehal To Khwab Se Aage Nahin 

Barha

Tool-e-Kalaam K Liye Maine Kiye Sawal,

Wo Mukhtasar Jawab Se Aage Nahin 

Barha

Rukhsar Ka Pata Nahin, Ankhain To 

Khoob Hain,

Deedar Abhi Naqaab Se Aage Nahin 

Barha

Wo Lazzat-e-Gunah Se Mehroom Reh 

Gaya,

Jo Khwahish-e-Sawab Se Aage Nahin 

Barha.

2 comments:

  1. Dear Fatima...Vry awesum selection
    Keep serving da most beautiful language on da planet w da most inspiring literature & poetry

    Best wishes

    Hasan Abidi

    ReplyDelete