koi saleeqa hai Arzoo ka nah bandagi meri bandagi hai
yeh sab Tumahra karam hai aaqa ke baat ab tak bani hui hai

kisi ka ahsaan kyun uthain kisi ko halaat kyun bitayen
Tumhi se mangeen ge tum hi do ge tumhare dar se hi Lo lagi hai

Amal ki mere asas kya hai bajuz nedamat ke paas kya hai
rahay Salamat bas unn ki nisbat mera to bas aasra yahi hai

ataa kiya mujh ko dard Ulfat kahan thi yeh pur khata ki qismat
mein iss karam ke kahan tha qabil huzoor ki bandah parwari hai

tajaliyon ke kafeel tum ho morad Qalb khalil tum ho
khuda ki roshan daleel tum ho yeh sab tumhari hi roshni hai

Basheer kahiye Nazeer kahiye unhen siraj munir kahiye
jo sir busr hai kalaam rabbi woh mere aaqa ki zindagi hai

yahi hai KHALID asaas Rehmat yahi hai KHALID banaye azmat
nabi ka urfan zِndgi hai nabi ka Urfan bandagi hai. .. !

kalaam Khalid Mahmood naqshbndi

koi saleeqa hai Arzoo ka nah bandagi meri bandagi hai,naat,



کوئی سَلِیقہ ہے آرزُو کا نہ بَندَگی میری بَندَگی ہے
یہ سب تُمھارا کرم ہے آقا کہ بات اب تک بَنی ہُوئی ہے

کِسی کا اِحسان کیوں اُٹھائیں کِسی کو حالات کیوں بتائیں
تُمہی سے مانگیں گے تُم ہی دو گے تُمھارے دَر سے ہی لَو لگی ہے

عَمَل کی میرے اَساس کیا ہے بَجُز ندامَت کے پاس کیا ہے
رہے سلامَت بس اُن کی نِسبَت میرا تو بس آسرا یہی ہے

عطا کِیا مُجھ کو دَردِ اُلفَت کہاں تھی یہ پُر خطا کی قِسمَت
مَیں اِس کرم کےکہاں تھا قابِل حُضُور کی بَندَہ پروری ہے

تجلّیِوں کےکفِیل تُم ہو مُرادِ قَلبِ خلیل تُم ہو
خُدا کی روشن دَلیل تُم ہو یہ سب تُمھاری ہی روشنی ہے

بشیِر کہیےنذیر کہیے اُنھیں سِراجِ مُنیر کہیے
جو سر بَسر ہے کلامِ ربی وہ میرے آقا کی زِندَگی ہے

یہی ہے خالدؔ اساسِ رَحمت یہی ہے خالدؔ بِنائے عَظمَت
نبی کا عِرفان زِندگی ہے نبی کا عرفان بَندَگی ہے۔۔۔!

کلام خالدؔ محمود نقشبندی