Ajab saniha guzra tha shab paraston per



عجیب سانحہ گزرا تھا شب پرستوں پر
دیا جلاتے رہے داستاں سناتے ہوئے
ترے بدن کا سفر کتنی بے دلی سے کٹا
گزر گیا ہوں فقط دائرے بناتے ہوئے
‫عاطف توقیر‬